اسفندیارا مائنڈ نہ کرنا

اسفند! یارا مائنڈ مت کرنا!!

_______________________اعجاز منگی

 

آج محسوس ہو رہا ہے

وہ خاندان ختم ہو گیا..

 

اسفند ! یارا مائنڈ مت کرنا

وہ ایک نوجوان کو نہیں

تمہارے خاندان کو پیٹ رہے تھے

دھرتی سے پوچھو

آکاش سے پوچھو

وہ لاش تمہارے خاندان کی تھی

وہ لاش باچا خان کی تھی

وہ لاش ولی خان کی تھی

وہ لاش غنی خان کی تھی!

وہ لاش ایک چیخ تھی

تمہاری مقتول تاریخ تھی

مشعل خان کے باپ نے

بیٹے کو نہیں

سرحدی گاندھی کے فلسفے کو دفن کیا ہے!!

 

اسفند !یارا مائنڈ مت کرنا

آج تمہارا خاندان

اس بچے کے ساتھ

دفن ہوگیا

جس کے سر پر

سرخ ٹوپی تھی

جس کے ہاتھ میں

قلم تھا

وہ قلم

جو علم تھا

وہ مردان کی مٹی میں مدفون ہوگیا!!

 

اسفند یارا!

تم تو جانتے ہو

آج اگر باچا خان زندہ ہوتا

وہ تاحیات بھوک ہڑتال کا اعلان کرتا

آج اگر ولی خان موجود ہوتا

وہ سیاست سے رٹائرمنٹ کا اعلان کرتا

آج اگر غنی خان جیتا ہوتا

وہ اس غم میں غرق ہوجاتا

 

اسفند یارا!

مائنڈ مت کرنا

مشعل مرگیا

اور تم زندہ ہو؟

Courtesy. Shah Mohammad Marri

#RipMashaalkhan://m.facebook.com/story.php?story_fbid=10212874558637889&id=1207297762

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s